شریف مافیا نے ملک کمزورکرنے کی کوشش کی تو دوبارہ سڑکوں پر نکلیں گے، عمران خان

اٹک: چیرمین پی ٹی آئی عمران خان کا کہنا ہے کہ کرپٹ خاندان کو بچانے کے لیے عدلیہ اور فوج پر حملے کیے جارہے ہیں لیکن ملک کو کمزور کرنے کی کوشش کی گئی تو ایک بار پھر سڑکوں پر نکلیں گے۔
اٹک میں جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے چیرمین تحریک انصاف عمران خان کا کہنا تھا کہ کچھ لوگ ذاتی مفادات کے لیے سیاست میں آکر کارخانے اور دولت بناتے ہیں جب کہ کچھ لوگ سیاست میں انسانیت کی خدمت کے لیے آتے ہیں ایسے لوگوں کو اللہ عزت سے نوازتا ہے جب کہ عوام بھی انہیں یاد رکھتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ آصف زرداری اور نواز شریف نے پاکستان کے لیے کبھی نہیں کھیلا بلکہ وہ اپنے لیے بیٹنگ کرتے ہیں، نوازشریف اور زرداری کو دیکھیں کہ اقتدار میں آنے سے پہلے کیا تھے اوراب کیا ہیں۔
عمران خان کا کہناتھا کہ ہمیں پاکستان کو اپنے پیروں پر کھڑا کرنا ہے اس لیے صرف قوم کا سوچنے والوں کو اپنی کابینہ میں وزیر بنائیں گےاور صرف وہی لوگ آئیں گے جوعوام کی خدمت کریں گے جب کہ ہم 10 کروڑ لوگوں کو غربت سے نکالنے کے لیے پالیسی بنائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں کسی کے آگے نہیں جھکنا اور نہ ہی قرضے مانگنے ہیں کیوں کہ جو قرضہ دیتا ہے وہ آپ کی آزادی لے لیتا ہے جب کہ ایران نے گیس پائپ لائن بنائی اگر ہم لے لیتے تو ایل این جی سے سستی پڑتی لیکن ہمیں قرضے دینے والوں نے ایران سے گیس لینے کی اجازت نہ دی۔
اٹک: چیرمین پی ٹی آئی عمران خان کا کہنا ہے کہ کرپٹ خاندان کو بچانے کے لیے عدلیہ اور فوج پر حملے کیے جارہے ہیں لیکن ملک کو کمزور کرنے کی کوشش کی گئی تو ایک بار پھر سڑکوں پر نکلیں گے۔
اٹک میں جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے چیرمین تحریک انصاف عمران خان کا کہنا تھا کہ کچھ لوگ ذاتی مفادات کے لیے سیاست میں آکر کارخانے اور دولت بناتے ہیں جب کہ کچھ لوگ سیاست میں انسانیت کی خدمت کے لیے آتے ہیں ایسے لوگوں کو اللہ عزت سے نوازتا ہے جب کہ عوام بھی انہیں یاد رکھتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ آصف زرداری اور نواز شریف نے پاکستان کے لیے کبھی نہیں کھیلا بلکہ وہ اپنے لیے بیٹنگ کرتے ہیں، نوازشریف اور زرداری کو دیکھیں کہ اقتدار میں آنے سے پہلے کیا تھے اوراب کیا ہیں۔
عمران خان کا کہناتھا کہ ہمیں پاکستان کو اپنے پیروں پر کھڑا کرنا ہے اس لیے صرف قوم کا سوچنے والوں کو اپنی کابینہ میں وزیر بنائیں گےاور صرف وہی لوگ آئیں گے جوعوام کی خدمت کریں گے جب کہ ہم 10 کروڑ لوگوں کو غربت سے نکالنے کے لیے پالیسی بنائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں کسی کے آگے نہیں جھکنا اور نہ ہی قرضے مانگنے ہیں کیوں کہ جو قرضہ دیتا ہے وہ آپ کی آزادی لے لیتا ہے جب کہ ایران نے گیس پائپ لائن بنائی اگر ہم لے لیتے تو ایل این جی سے سستی پڑتی لیکن ہمیں قرضے دینے والوں نے ایران سے گیس لینے کی اجازت نہ دی۔
اٹک: چیرمین پی ٹی آئی عمران خان کا کہنا ہے کہ کرپٹ خاندان کو بچانے کے لیے عدلیہ اور فوج پر حملے کیے جارہے ہیں لیکن ملک کو کمزور کرنے کی کوشش کی گئی تو ایک بار پھر سڑکوں پر نکلیں گے۔
اٹک میں جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے چیرمین تحریک انصاف عمران خان کا کہنا تھا کہ کچھ لوگ ذاتی مفادات کے لیے سیاست میں آکر کارخانے اور دولت بناتے ہیں جب کہ کچھ لوگ سیاست میں انسانیت کی خدمت کے لیے آتے ہیں ایسے لوگوں کو اللہ عزت سے نوازتا ہے جب کہ عوام بھی انہیں یاد رکھتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ آصف زرداری اور نواز شریف نے پاکستان کے لیے کبھی نہیں کھیلا بلکہ وہ اپنے لیے بیٹنگ کرتے ہیں، نوازشریف اور زرداری کو دیکھیں کہ اقتدار میں آنے سے پہلے کیا تھے اوراب کیا ہیں۔
عمران خان کا کہناتھا کہ ہمیں پاکستان کو اپنے پیروں پر کھڑا کرنا ہے اس لیے صرف قوم کا سوچنے والوں کو اپنی کابینہ میں وزیر بنائیں گےاور صرف وہی لوگ آئیں گے جوعوام کی خدمت کریں گے جب کہ ہم 10 کروڑ لوگوں کو غربت سے نکالنے کے لیے پالیسی بنائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں کسی کے آگے نہیں جھکنا اور نہ ہی قرضے مانگنے ہیں کیوں کہ جو قرضہ دیتا ہے وہ آپ کی آزادی لے لیتا ہے جب کہ ایران نے گیس پائپ لائن بنائی اگر ہم لے لیتے تو ایل این جی سے سستی پڑتی لیکن ہمیں قرضے دینے والوں نے ایران سے گیس لینے کی اجازت نہ دی۔
اٹک: چیرمین پی ٹی آئی عمران خان کا کہنا ہے کہ کرپٹ خاندان کو بچانے کے لیے عدلیہ اور فوج پر حملے کیے جارہے ہیں لیکن ملک کو کمزور کرنے کی کوشش کی گئی تو ایک بار پھر سڑکوں پر نکلیں گے۔
اٹک میں جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے چیرمین تحریک انصاف عمران خان کا کہنا تھا کہ کچھ لوگ ذاتی مفادات کے لیے سیاست میں آکر کارخانے اور دولت بناتے ہیں جب کہ کچھ لوگ سیاست میں انسانیت کی خدمت کے لیے آتے ہیں ایسے لوگوں کو اللہ عزت سے نوازتا ہے جب کہ عوام بھی انہیں یاد رکھتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ آصف زرداری اور نواز شریف نے پاکستان کے لیے کبھی نہیں کھیلا بلکہ وہ اپنے لیے بیٹنگ کرتے ہیں، نوازشریف اور زرداری کو دیکھیں کہ اقتدار میں آنے سے پہلے کیا تھے اوراب کیا ہیں۔
عمران خان کا کہناتھا کہ ہمیں پاکستان کو اپنے پیروں پر کھڑا کرنا ہے اس لیے صرف قوم کا سوچنے والوں کو اپنی کابینہ میں وزیر بنائیں گےاور صرف وہی لوگ آئیں گے جوعوام کی خدمت کریں گے جب کہ ہم 10 کروڑ لوگوں کو غربت سے نکالنے کے لیے پالیسی بنائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں کسی کے آگے نہیں جھکنا اور نہ ہی قرضے مانگنے ہیں کیوں کہ جو قرضہ دیتا ہے وہ آپ کی آزادی لے لیتا ہے جب کہ ایران نے گیس پائپ لائن بنائی اگر ہم لے لیتے تو ایل این جی سے سستی پڑتی لیکن ہمیں قرضے دینے والوں نے ایران سے گیس لینے کی اجازت نہ دی۔