ناقص پیٹرول کی شکایت کرنے پر کار ساز کمپنی ہنڈا کو دھمکی

اسلام آباد: ملک بھر میں ناقص پیٹرولیم کی فروخت کرنے کی اوگرا کو شکایت کرنے والی کار ساز کمپنی ہنڈا کو پاکستان میں درجن بھر سے زائد آئل مارکیٹنگ کمپنیوں اور ریفائنریز کی نمائندہ تنظیم دی آئل کمپنیز ایڈوائزری کونسل نے دھمکی دی ہے کہ وہ مبینہ طور پر کم معیار کا ایندھن فراہم کرنے کے حوالے سے اپنی شکایت واپس لے ورنہ قانونی کارروائی کا سامنا کرنے کے لیے تیار رہے۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان کے پیٹرول پمپس پر ناقص پیٹرول کی فروخت سے متعلق شکایت کرنے والی کار ساز کمپنی کو ملک میں تیل کی مارکیٹنگ اور ریفائنری کمپنیز نے دھمکی دی ہے کہ وہ اوگرا سے اپنی شکایت واپس لے، ورنہ اس کے خلاف تمام کمپنیاں ملک کر قانونی کارروائیں کریں گی،  خیال رہے کہ کہ ہنڈا پاکستان لمیٹڈ کی جانب سے آئل اینڈ گیس ریگولیٹری اتھارٹی کو شکایت درج کرائی گئی تھی جس میں موقف اختیار کیا گیا تھا کہ پاکستان میں تین بڑی آئل کمپنیوں پاکستان اسٹیٹ آئل  ٹوٹل اور شیل پاکستان کے ایندھن میں میگنیز کی مقدار زیادہ ہے، جس سے ان کی گاڑیوں کے انجن کو نقصان پہنچ رہا ہے، جس کی وجہ سے انہوں نے اپنی حالیہ 1.5 ایل وی ٹیک ٹربو گاڑی کی پیداوار کو بھی بند کردیا ہے۔