اثاثہ جات ریفرنس: اسحاق ڈار کے ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری

اسلام آباد: احتساب عدالت نے اثاثہ جات ریفرنس کی سماعت کے دوران عدم پیشی پر وزیر خزانہ اسحاق ڈار کے ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری کردیئے۔تفصیلات کے مطابق اسلام آباد کی احتساب عدالت میں قومی احتساب بیورو (نیب )کی جانب وزیر خزانہ اسحاق ڈار کیخلاف اثاثہ جات ریفرنس کی سماعت ہو ئی ،احتسا ب عدالت کے جج محمد بشیر کیس کی سماعت کی ،دوران سماعت عدالت نے عدم پیشی پر وزیر خزانہ اسحاق ڈار کے ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری کردیئے۔وزیر خزانہ اسحاق ڈار آج بھی احتساب عدالت میں پیش نہیں ہوئے ،ان کے ضامن احمد علی قدوسی عدالت میں پیش ہوئے، معزز جج محمد بشیر نے اسحاق ڈار کے ضامن سے سوال کیا کہ ملزم کب پیش ہوں گے جس پر ضامن کا کہنا تھا کہ اسحاق ڈار کی مکمل صحت یابی میں 3 سے 6 ہفتے لگیں گے۔اس موقع پر نیب پراسیکیوٹر نے عدالت کو آگاہ کیا کہ کیس کے تفتیشی افسر لاہور میں ہیں اور کچھ دیر بعد عدالت میں پیش ہوں گے۔خیال رہےوزیر خزانہ اسحاق ڈار اب تک 7 مرتبہ احتساب عدالت کے سامنے پیش ہوئے اور 4 سماعتوں پر غیر حاضر رہے جس پر ان کے وارنٹ گرفتاری جاری کیے گئے،ریفرنس میں استغاثہ کے 28 میں سے 5 گواہوں نے بیانات ریکارڈ کرا لیے ہیں۔سماعت کے بعد احتساب عدالت نے اسحاق ڈار کے ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری کردیئے اور ان کے ضامن کو شوکاز نوٹس جاری کرتے ہوئے کیس کی سماعت 21 نومبر تک کے لیے ملتوی کردی۔