سام سنگ دنیا کا انوکھا موبائل تیار کرے گا

سیول: جنوبی کورین کمپنی سام سنگ ایک ایسے موبائل تیار کرنے میں مصروف ہے، جو انسانی ہتھیلی کو پڑھ سکے گا اوراسے بطور پاس ورڈ استعمال کرےگا، ماہرین کے مطابق سام سنگ اسے ہتھیلیوں کے نشانات کے ساتھ اپنے اسمارٹ فون کو مزید محفوظ بنانا چاہتا ہے، امریکی ماہرین کا خیال ہے کہ سام سنگ مستقبل کے اسمارٹ فون میں ہتھیلی کو بطور پاس ورڈ استعمال کرنے کا ارادہ رکھتا ہے۔

تفصیلات کے مطابق جنوبی کورین کمپنی سام سنگ ان دنوں دنیا کے منفرد موبائل فون بنانے کی تیاریوں میں مصروف ہے، غیر ملکی خبر رساں اداروں کے مطابق سام سنگ نے اس ضمن میں ایک پیٹنٹ کی درخواست دائر کی ہے جو آپ کے ہاتھوں کی لکیروں کو پڑھ سکے گی، تاہم سام سنگ نے کہا ہے کہ یہ روایتی فنگر پرنٹ (نشاناتِ انگشت) اور چہرے کی شناخت یعنی فیس ریکگنیشن جیسے بایومیٹرک نظام کی جگہ نہیں لے گی اور سام سنگ نے ان دونوں طریقوں کو جاری رکھنے کا عندیہ دیا ہے۔