ڈاکٹرطاہرالقادری جب بھی سڑکوں پر نکلیں گے تو پی ٹی آئی ان کے ساتھ ہوگی، عمران خان

اسلام آباد:چیرمین پاکستان تحریک انصاف عمران خان کا کہنا ہے کہ ڈاکٹر طاہرالقادری سانحہ ماڈل ٹائون میں نہتے لوگوں پر گولیاں برسانے والوں کے خلاف جب سڑکوں پر نکلیں گے تو پی ٹی آئی ان کے ساتھ ہوگی۔تفصیلات کے مطابق اسلام آباد کی انسداد دہشت گردی عدالت میں پیشی کے بعد میڈیا سےگفتگو کرتے ہوئے عمران خان کا کہنا تھا کہ سانحہ ماڈل ٹاؤن میں نہتے لوگوں کو گولیاں ماری گئیں ،نجفی رپورٹ میں شہبازشریف کا جھوٹ سامنے آگیا،شہبازشریف اورراناثنااللہ کیخلاف دہشت گردی کاکیس ہوناچاہئے،انہیں فوری مستعفی ہو جانا چاہئے،عابد شیر علی کا والدکہتا ہے کہ رانا ثنا اللہ نے 18 قتل کئے ہیں، طاہرالقادری کو اعتماد دلانا چاہتے ہیں کہ جب وہ سڑکوں پر نکلیں گے تو ان کے ساتھ ہوں گے۔ عمران خان نے کہا کہ ہم نے صاف اور شفاف الیکشن کے لئے پرامن سیاسی احتجاج کیا تو مجھ پر دہشت گردی کا مقدمہ بنادیا گیا، آمر کی گود میں پلنے والے ہی کسی پر اس طرح دہشت گردی کا کیس کر سکتے ہیں۔ انہوںنے کہا کہ زاہدحامد نے ایوان میں کہاکہ کوئی ترمیم نہیں ہوئی،پارلیمنٹ کرپٹ شخص کوبچانے کیلئے لگی ہوئی تھی،احسن اقبال معتبرشکل بناکرجھوٹ بولتے ہیں۔عمران خان کا کہناتھا کہ میراسلطانہ ڈاکو سے موازنہ کیوں کیاجاتا ہے ،میں نے بیرون ملک پیسہ کمایا اور ملک میں لایا جبکہ نوازشریف 300 ارب چوری کرکے باہر لے گئے ،انہوں نے کہا کہ میں پیسہ لوٹنے والوں سے ہاتھ نہیں ملاتا انہیں جیل میں ڈالتا ہوں، چیئرمین تحریک انصاف نے کہا کہ آصف زرداری نے جس طرح ڈانس کیاانہیں مزیدپرفارمنس دینی چاہئے۔امریکا کے مقبوضہ بیت المقدس میں اپنے سفارتخانے کی منتقلی سے متعلق سوال پرعمران خان نے کہا ہے کہ امریکی سفارتخانے کی یروشلم منتقل کرنے کی مذمت کرتاہوں،پہلے فلسطینیوں کی زمینوں پر قبضہ کیا گیااور انہیں ظلم کا نشانہ بنایا گیا، سارے مسلمان ممالک کے سربراہان کو اس معاملے پر کھڑے ہونا چاہیے، ٹرمپ جیسے لوگ مسلمانوں کو انسان ہی نہیں سمجھتے اور وزیراعظم کو بھی ترک صدر رجب طیب اروان جیسا قدم اٹھانا چاہیے۔