پی سی بی نے شرجیل خان کےپینل کوڈ میں ترمیم کے الزامات مسترد کردیے

 لاہور: پاکستان کرکٹ بورڈ نے کوڈ میں ترمیم کے حوالے سے شرجیل خان کے الزامات مسترد کرتے ہوئے کہا ہےکہ اسپاٹ فکسنگ میں معطل بلے باز شرجیل خان کی جانب سے متصبانہ رویے اور کیس میں پھنسانے کے الزامات بے بنیاد ہیں، خیال رہے کہ شرجیل خان نے الزام عائد کیا کہ ان کے مقدمے کی سماعت کے دوران پی سی بی نے مبینہ طور پر کوڈ آف کنڈکٹ میں ترمیم کی جبکہ اس کے ساتھ ساتھ انہوں نے پی سی بی چیئرمین نجم سیٹھی اور اینٹی کرپشن یونٹ کے سربراہ اعظم خان کے کردار پر بھی شکوک کا اظہار کیا تھا۔

تفصیلات کے مطابق پی سی بی نے شرجیل خان کی جانب سے کوڈ میں ترمیم کے الزامات کو مسترد کردیا، پی سی بی کی جانب سے جاری پریس ریلیز میں بتایا گیاکہ نئے یا پرانے اینٹی کرپشن کوڈ میں کرکٹرز سے اپیل کا حق نہیں چھینا گیا،وہ آزادانہ حیثیت میں کام کرنے والے ایڈجوڈیکیٹر سے رجوع کرسکتے ہیں جس کا فیصلہ حتمی ہوگا، ترمیم دراصل کھلاڑیوں کے حق میں جاتی ہے جس کے مطابق اب وہ فیصلے کیخلاف اسپورٹس کی آبٹریشن کورٹ میں جاسکتے ہیں، کوڈ میں ترمیم شرجیل خان کے کیس پر اثر انداز نہیں ہوئی۔ اس کا اطلاق آئندہ کیسز پر ہوگا۔