امریکی فیصلے سے عالم اسلام میں کشیدگی اورانتشارپیدا ہوا ہے،قائد حزب اختلاف

اسلام آباد:قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف خورشید شاہ نے کہا ہے کہ امریکی فیصلے سے عالم اسلام میں کشیدگی،انتشارپیدا ہوا ہے۔تفصیلات کے مطابق اسلام آباد میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے خورشید شاہ کا کہنا تھا کہ امریکی فیصلے سے عالم اسلام میں کشیدگی اورانتشارپیدا ہوا ہے،امریکادنیا میں بڑا انتشار پیدا کرنا چاہتا ہے، 10،20سال سے مسلم ممالک کے آپسی انتشارسے یہودیوں کوموقع ملا،او آئی سی کی میٹنگ بلائی گئی جو با مقصد ہونی چاہیے،انہوں نے کہا کہ اسلامی ممالک کو صحیح معنوں میں ایک پلیٹ فارم پر آنا ہو گا،ایک بار پھر ذوالفقار علی بھٹو جیسا کردار درکار ہے۔دوسری جانب پیپلز پارٹی کا وفد آج طاہرالقادری سے ملاقات کرے گا،اس حوالے سے پوچھے گئے سوال کے جواب میں خورشید شاہ کا کہنا تھا کہ طاہرالقادری سے ملاقات نئی نہیں،پہلے بھی رابطے رہے ہیں،ہم2002 میں مشرف کے خلاف ایک ساتھ چلے ہیں۔ اپوزیشن لیڈر نے کہا کہ ملاقات میں موجودہ سیاسی صورتحال سمیت تمام ایشوز زیر بحث آئیں گے اورملک کوعدم استحکام کی صورتحال سے نکالنے پر بات ہو گی۔