شرجیل میمن کے اسپتال کے کمرے سے شراب برآمدگی کا مقدمہ درج

0

کراچی: پیپلزپارٹی کے رہنما اور سابق صوبائی وزیر اطلاعات و نشریات شرجیل انعام میمن کے اسپتال کے کمرے سے شراب برآمدگی کا مقدمہ درج کر لیا گیا ہے۔
میڈیا رپورٹس کے مطابق کراچی پولیس کا کہنا ہے کہ چیف جسٹس کے دورے کے بعد شرجیل میمن پر امتناع منشیات کے سیکشن 4 کے تحت مقدمہ درج کیا گیا ہے۔
مقدمہ جیل سپرنٹنڈنٹ مجاہد خان کی مدعیت میں بوٹ بیسن تھانے میں درج کیا گیا ہے جس میں شرجیل میمن اور ان کے 3 ملازمین مشتاق، محمد جام اور شکر دین کو نامزد کیا گیا ہے۔
چیف جسٹس جسٹس ثاقب نثار نے کلفٹن میں واقع ضیاءالدین اسپتال کا ہنگامی دورہ کیا تو شرجیل میمن کے کمرے سے شراب کی تین بوتلیں ملیں جس کے بعد شرجیل میمن کو سینٹرل جیل منتقل کر دیا گیا،سپریم کورٹ کراچی رجسٹری پہنچنے کے بعد چیف جسٹس نے اپنے ریمارکس میں شراب کی بوتلوں کا تذکرہ کیا اور بتایا کہ شرجیل میمن نے ان بوتلوں کی ملکیت سے انکار کیا ہے،جسٹس ثاقب نثار نے بعد ازاں اٹارنی جنرل کو یہ معاملہ دیکھنے کی ہدایت کی۔
گذشتہ برس قومی احتساب بیورو (نیب) نے شرجیل انعام میمن اور 11 دیگر ملزمان کے خلاف ریفرنس میں الزام عائد کیا تھا کہ انہوں نے 5 ارب روپے سے زائد کی کرپشن کی ہے،شرجیل میمن پر الزام ہے کہ اطلاعات و نشریات کے وزیر کے طور پر انہوں نے محکمے کے افسروں اور اشتہاری کمپنیوں کے ساتھ مل کر کرپشن کی تھی۔