زلفی بخاری کی بطور چیئرمین پی ٹی ڈی سی بورڈ تعیناتی چیلنج

اسلام آبادہائیکورٹ میں زلفی بخاری کی بطور چیئرمین پی ٹی ڈی سی بورڈ تعیناتی اورنیشنل ٹورازم کوآرڈینیشن بورڈ کی تشکیل کو چیلنج کردیاگیا،عدالت نے وفاقی حکومت کو نوٹسز جاری کرتے ہوئے جواب طلب کرلیا۔

اسلام آباد ہائیکورٹ میں زلفی بخاری کی بطور چیئرمین پی ٹی ڈی سی بورڈ تعیناتی چیلنج کردی گئی،نیشنل ٹورازم کوآرڈینیشن بورڈ کی تشکیل بھی عدالت میں چیلنج کردی گئی،پی ٹی ڈی سی ملازمین کی جانب سے عرفات چوہدری ایڈووکیٹ عدالت میں پیش ہوئے۔

وکیل حافظ عرفات نے موقف اختیار کیاکہ چیئرمین بورڈ زلفی بخاری کی تعیناتی کابینہ نے خلاف قانون کی،جسٹس عامر فاروق نے استفسار کیاکہ نیشنل ٹورازم کوآرڈینیشن بورڈ کس قانون کے تحت بنایا گیا؟۔

وکیل درخواست گزارنے کہاکہ18ویں ترمیم کے بعد یہ معاملہ صوبوں کو منتقل ہوچکا،وفاقی حکومت کو اختیارنہیں، وکیل حافظ عرفات چودھری نے کہاکہ چیئرمین بورڈ پی ٹی ڈی سی کی تعیناتی بورڈ کا اختیار ہے، منیجنگ ڈائریکٹرکی تعیناتی بغیر کسی اشتہارکے کردی گئی۔

درخواست میں استدعا کی گئی ہے کہ زلفی بخاری کی بطور چیئرمین اور ایم ڈی کی تعیناتی کالعدم قرار دی جائے،نیشنل ٹورازم کوآرڈینیشن بورڈ کی تشکیل کوغیرقانونی قراردیکرکالعدم قراردیاجائے۔

عدالت نے منیجنگ ڈائریکٹر پی ٹی ڈی سی تعیناتی اورنیشنل ٹورازم کوآرڈینیشن بورڈ کی تشکیل کےخلاف درخواست پر نوٹسز جاری کرتے ہوئے وفاقی حکومت سے 2 ہفتے میں جواب طلب کرلیا۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.