جہانگیرپارک سے اغوا بچے کا ڈراپ سین

جہانگیر پارک سے بچے کو اغواکرنے والے ملزمان نے ابتدائی بیان ریکارڈ کروا دیا ہے، ظالم ماں باپ نے بچے کی خواہش پوری کرنے کیلیے دوسروں کا بچہ اغواکیا ۔

ملزم زمان نے ابتدائی بیان میں انکشاف کیاہے کہ 9 سال کا روحان اکلوتا تھااور بھائی کیلیے زد کرتا تھا ، رخسانہ کی شوہر سے طلاق کے بعد ملزم سے شادی ہوئی تھی ، بچے کی ضد پوری کرنے کیلیے دوسرا بچہ اغواکرنے کا سوچا،

ملزم کے مطابق سدیس کواغواکے بعد جینسٹرگوٹھ میں مکان پر رکھا تھا،سدیس کو روحان سے مانوس کرنے کی کوشش کی اوراس کا خیال رکھا ۔

پولیس نے گزشتہ روز جدید ٹیکنالوجی کی مدد سے اغواءکار ماں باپ کو گرفتار کر لیا تھا اور حکام کا کہناہے کہ ملزمان کا ابتدائی بیان ریکارڈ ہو گیاہے تاہم مکمل بیان کل تحریرکیا جائے گا

ملزمان کے ہمراہ بچے ، والد کا ڈٰ این اے ٹیسٹ کروایا جائے گا، دیکھا جائے گا کہ نو سال کا روحان بھی ملزمان کا اپنا بچہ ہے یا کسی اورکا۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.