مہاتیرمحمد نے استعفیٰ دیدیا

ملائیشیا کے وزیراعظم مہاتیر محمد نے اپنے عہدے سے استعفیٰ دے دیا۔مہاتیر محمد نے ملائیشین بادشاہ کو اپنا استعفیٰ جمع کرایا۔

ملائیشیا کی حکومت کے اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ مہاتیر محمد کا استعفیٰ نئی حکومت کے قیام سلسلے کی ایک کڑی ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ مہاتیر محمد کے اپنے اتحادی انورابراہیم سے اختلافات شدید ہوگئے تھے، اور اب نئی حکومت انور ابراہیم کے بغیر قائم کی جائے گی۔

گزشتہ دنوں مہاتیر محمد نے کہا تھا کہ وہ نومبر2018میں ایشیا پیسفک اقتصادی تعاون تنظیم کے اجلاس کے بعد عہدہ چھوڑ دیں گے تاہم ان کے اتحادی انور ابراہیم نے ان کے فیصلے سے عدم اتفاق کیا تھا جس کے بعد گزشتہ روز سے ملائیشین سیاسی حلقوں میں گہما گہمی چل رہی تھی۔

یہ امکان بھی ظاہرکیاجا رہا تھا کہ مہاتیر محمد دیگر اپوزیشن جماعتوں کے ساتھ ملکر ایک نئی حکومت کی تشکیل کا اعلان کرسکتے ہیں تاہم اب انہوں نے اپنے عہدے سے استعفیٰ دے دیا ہے۔

یاد رہے کہ دوہزار اٹھارہ کے عام الیکشن میں نجیب رزاق کو شکست دینے کیلیے مہاتیر محمد نے دیگر دوجماعتوں کے ساتھ اتحاد بنا کر انتخابات میں حصہ لیاتھا۔ اس دوران یہ طے پایا تھا کہ کامیابی کی صورت میں پہلے دو سال مہاتیر محمد وزیراعظم رہیں گے جبکہ بقیہ مدت کیلئے انورابراہیم کو وزیراعظم بنایا جائے گا۔

تبصرے بند ہیں.