مصباح الحق نے نیوزی لینڈ میں شرمناک شکست کی وجہ بتا دی

پاکستان کرکٹ ٹیم کے ہیڈ کوچ مصباح الحق نے نیوزی لینڈ میں شرمناک شکست کی وجہ بتاتے ہوئے کہا کہ 18 سے 19 دن ہم نے کمروں میں گزارے اور ٹریننگ نہیں کر سکے جبکہ کورونا وائرس کی وجہ سے کھلاڑیوں میں انجریز بڑھ رہی ہے اور تمام کوچز کو بھی پریشانی ہو رہی ہے۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان کرکٹ ٹیم کے ہیڈ کوچ مصباح الحق نے دورہ نیوزی لینڈ میں شکست کا مزہ چکھنے کے بعد لاہور میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ نیوزی لینڈ میں ہار پر مجھے اور ٹیم کو مایوسی ہوئی ہے، نیوزی لینڈ کے دورہ سے قبل ریگولر اوپنر فخر زمان کا ان فٹ ہونا بھی نقصان کا باعث بنا، بابر اعظم کا نہ ہونا ایسے ہی ہے جیسے نیوزی لینڈ کے پاس کین ولیم سن کا نہ ہونا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ٹیم کی کارکردگی اور حقائق پر بات کرنے آیا ہوں، نیوزی لینڈ کی موجودہ ٹیم مضبوط ترین ٹیموں میں ہے، نیوزی لینڈ نے ہم سے بہتر کرکٹ کھیلی وہ سیریز کھیلتے ہوئے آرہے تھے، سب کوچز کو کورونا کی وجہ سے مسائل پیش آرہے ہیں، آج کی کرکٹ پچھلے ڈیڑھ سال کی کرکٹ سے مختلف ہے، کرکٹ کمیٹی کا اجلاس معمول کی بات ہے، میں گورننگ بورڈ میں بھی پیش ہو چکا ہوں۔

مصباح الحق نے کہا کہ کرکٹ کمیٹی کو مکمل بریفنگ دوں گا،امید ہے کہ وہ بات کو سمجھیں گے، ہم جیسی کرکٹ کھیلتے آئے ہیں کارکردگی اس کے مطابق نہیں رہی، میں معذرت کرنے نہیں آیا البتہ مایوسی ضرور ہے کہ ہم سیریز ہار گئے لیکن د ورے سے قبل ریگولر اوپنر فخر زمان کا ان فٹ ہونا نقصان دہ ثابت ہوا اور پھر بابراعظم کی انجری نے مشکلات پیدا کیں، بابراعظم کا نہ ہونا ایسا ہی ہے جیسے نیوزی لینڈ کے پاس کین ولیم سن نہ ہو۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.