مرید عباس قتل کیس۔ ملزم عادل زمان کا شناختی کارڈ بلاک۔تمام جائیداد ضبط کرنے کا حکم

جوڈیشل کمپلیکس ایڈیشنل سیشن جج کی عدالت میں اینکر مرید عباس قتل کیس کی سماعت ہوئی جہاں ملزم عادل زمان کو اشتہاری قراردینے کی رپورٹ پیش کی گئی۔

عدالت نے ملزم عادل زمان کا شناختی کارڈ بلاک کرنے اوراس کی  منقولہ اور غیر منقولہ جائیداد بھی ضبط کرنے کا حکم دیا۔

اس کے ساتھ عدالت نے مرکزی عاطف زمان پر فرد جرم عائد کرنے کی تاریخ بھی مقررکردی۔ ملزم عاطف زمان پر30 جنوری کو فرد جرم عائد کی جائے گی۔

ستمبر 2020 میں عدالت کی جانب سے درخواست ضمانت خارج ہونے پر مرکزی ملزم عادل زمان احاظ عدالت سے بآسانی فرار ہوگیا تھا، جس کو پولیس تاحال گرفتار کرنے میں ناکام ہے۔

واضح رہے کہ 9 جولائی 2019 کو ڈیفنس میں بول ٹی وی کے اینکر مرید عباس اور خضر حیات نامی شخص کو ان کے بزنس پارٹنر عاطف زمان نے قتل کیا تھا جس کے بعد اس نے خود کو بھی گولی مارکر خودکشی کی کوشش کی تھی۔

اس کیس میں مرکزی ملزم عاطف زمان اور اس کا بھائی عادل زمان ہیں۔ عاطف زمان کو پولیس نے زخمی حالت میں گرفتار کرلیا تھا جبکہ عادل زمان کافی عرصہ روپوش رہنے کے بعد گرفتارہوا۔

تبصرے بند ہیں.