میت سے زیورات چوری کرنے والی خاتون گرفتار

فرانس کی پولیس نے ایک 60 سال کی خاتون کو میت کے جسم سے زیورات چوری کرنے کے الزام میں گرفتارکرلیا۔

چوری کا یہ واقعہ شمالی شہر لیفان میں پیش آیا،سوگوار خاندان نے تدفین کے دوران میت کے پاس ایک نامعلوم خاتون کو دیکھا تو انھیں ان کی موجودگی پرکوئی شک نہیں ہوا۔

فرانسیسی میڈیا کے مطابق جب اہلخانہ واپس آئے تو انھوں دیکھا کہ میت کے زیوارت غائب ہیں۔ ان کے گلے کا ہار، انگوٹھی اور بالیاں سب کی سب غائب ہیں۔

اہلخانہ نے پولیس کو اطلاع دی اور پولیس نے فوری طور پر تفتیش کرتے ہوئے مشتبہ ملزم کی شناخت کی۔ مشتبہ ملزم ایک ساٹھ سال کی خاتون نکلی جو وہیں قریب رہتی ہیں جہاں سوگوار خاندان کی رہائش ہے۔

پولیس نے اسی گھرکے ایک شخص کے بٹوے کی چوری کا الزام بھی اسی خاتون پرعائد کیا۔ یہ واقعہ 24 اگست منگل کے روزکا ہے۔

جب مشتبہ خاتون کے گھر کی تلاشی لی گئی تو پولیس کو وہاں حالیہ دنوں میں ہونے والی اموات کی خبروں کے تراشے بھی ملے۔ ان میں اہلخانہ کے گھراورخصوصی کمرے میں داخل ہونے کے کوڈ بھی درج تھے جہاں تابوت میں میت رکھی جانی تھی۔ملزمہ کو اگلے سال سنہ 2022 میں عدالت میں پیش کیا جائے گا۔

خاتون نے بتایا کہ وہ مرنے والے کی دوست تھی تو گھر والوں نے اسے کھلے تابوت کے پاس اظہار عقیدت کے لیے تنہا چھوڑ دیا تھا۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.