اسرائیلی فورسز کی فائرنگ سے الجزیرہ کی خاتون صحافی جاں بحق

غرب اردن:مغربی کنارے میں اسرائیلی فورسز کی فائرنگ سے الجزیرہ کی خاتون صحافی جاں بحق ہوگئیں۔

غیر ملکی خبر ایجنسی کے مطابق الجزیرہ اور فلسطین کی وزارت صحت نے شیریں ابوعاقلہ کی موت کی تصدیق کردی ہے۔خبر ایجنسی کے مطابق شیریں ابوعاقلہ الجزیرہ کی عربی سروس کے ممتاز صحافی تھیں۔

بین الاقوامی میڈیا رپورٹس کے مطابق شیرین ابوابوعاقلہ کواسرائیلی فوج کے آپریشن کی کوریج کے دوران سر میں گولی لگی، جائے وقوعہ سے ملنے والی فوٹیج میں شیریں ابوعاقلہ کو پریس شرٹ اور ہیلمٹ پہنے دیکھا جا سکتا ہے۔

شیریں ابوعاقلہ ایک وسیع پیمانے پر جانے جانے والی اور قابل احترام صحافی تھیں جنہوں نے کئی دہائیوں تک اسرائیل اور فلسطینیوں کو کورکیا۔

خاتون صحافی کے ساتھیوں اور دوستوں نے اُن کی موت پر گہرے دُکھ کا اظہار کرتے ہوئے صحافت کے لیے بڑا نقصان قرار دیا ہے۔ دوسری جانب شیریں ابوعاقلہ کی موت پر اسرائیل کی جانب سے کسی ردّعمل کا اظہار نہیں کیا گیا۔