روپے کے مقابلے میں امریکی ڈالر کی قدر مزید گھٹ گئی

اسلام آباد(اُمت نیوز) تبادلہ مارکیٹ میں کاروباری ہفتے کے پہلے روز پاکستانی روپے کے مقابلے میں امریکی ڈالر کی قدر میں کمی کا رجحان برقرار ہے۔

سال 2024 کے دوسرے مہینے میں کاروباری ہفتے کے پہلے روز ڈالر کے مقابلے میں روپے کی قدر میں اضافہ ریکارڈ کیا گیا، آج کاروبار کے آغاز پر انٹربینک میں ڈالر کی قدر میں 20 پیسے کی کمی ہوئی۔

امریکی کرنسی کی قدر میں کمی کے بعد انٹربینک میں ڈالر کی قیمت 279 روپے 20 پیسے روپے پر آگئی۔

گزشتہ کاروباری ہفتے کے اختتام پر ڈالر کی قیمت 279 روپے 40 پیسے پر بند ہوئی تھی۔

ڈالر کی قیمت مزید گرنے کی پیشگوئی
چیئرمین پاکستان فاریکس ایکس چینج ایسوسی ایشن ملک بوستان نے ڈالر کی قیمت مزید گرنے کی پیشگوئی کرتے ہوئے ڈالر رکھنے والوں کو خبردار کردیا۔

ملک بوستان نے ہے کہ ڈالرز کی بڑی تعداد لاکرز میں رکھی گئی تھی اور بینکوں کا عملہ بلیک مارکیٹنگ میں ملوث افراد کے ساتھ مل کر یہ ڈالرز حوالہ اور ہْنڈی میں استعمال کرتے تھے اگر بلیک مارکیٹنگ میں ملوث افراد کیخلاف کارروائی جاری رہی تو ڈالر 250 روپے سے نیچے آجائے گا۔

واضح رہے کہ گزشتہ سال ستمبر میں انٹربینک مارکیٹ میں ڈالر 307 روپے کی سطح پر پہنچ گیا تھا تاہم نگراں حکومت کی جانب سے کریک ڈاؤن کے بعد ڈالر کی قدر میں کمی کا سلسلہ جاری ہے اور ستمبر سے ابتک ڈالر کی قدر میں مجموعی طور پر تقریباً 28 روپے کی کمی دیکھی گئی ہے۔

دوسری جانب پاکستان اسٹاک ایکسچینج میں کاروبار میں تیزی دیکھی گئی اور کاروبار کا مثبت آغاز ہوا۔

پاکستان اسٹاک ایکسچینج کے 100 انڈیکس میں 300 پوائنٹس کا اضافہ ہو اجس کے بعد انڈیکس 63 ہزار 300 پوائنٹس کی سطح پر پہنچ گیا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔