ماں نے کالا جادو کرتے ہوئے اپنے ہی دو معصوم بچوں کو زندہ جلا دیا

لاہور کے علاقے قلعہ گجر سنگھ کوارٹرز میں کالا جادو کرنے کے لیے اپنے ہی معصوم بیٹا و بیٹی کو مبینہ طور پر زندہ جلانے کی کوشش کرنے والی’شقی القلب‘ ماں کو پولیس نے گرفتار کرلیا ہے۔

جائے وقوع سے پولیس کو کمسن بچے جھلسی ہوئی حالت میں ملے ہیں جنہیں فوری طور پر طبی امداد کے لیے اسپتال منقتل کردیا گیا ہے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق بچوں کے والد سائمن سلیم کا کہنا ہے کہ میری بیوی انیتا بی بی کالا جادو سیکھ رہی تھی جس نے اس دوران بچوں کو جلایا۔ انیتا نے اپنی 3 سالہ بیٹی مریم اور2 سالہ جارج کو گلے میں رسی ڈال کر جلایا.

ملزمہ انیتا اپنے بچوں کو تین روز قبل پھوپھی کے گھر لے کرگئی تھی اورگزشتہ تین روز سے انہیں رسیوں سے باندھ کر رکھا ہواتھا، جب کہ بچوں کے جسم کو موم بتیوں اور آہنی راڈ سے داغا گیا تھا۔ واقعے کی اطلاع پولیس کو دے دی گئی ہے۔

دوسری جانب ڈاکٹرز کا کہنا ہے کہ دونوں بچوں کا جسم مختلف حصوں سے جلا ہوا ہے اور ان کے گلے پر رسیوں کے نشان موجود ہیں۔

تبصرے بند ہیں.