پی ٹی وی، پارلیمنٹ حملہ کیس: وزیراعظم عمران خان کوحاضری سے مستقل استثنیٰ

0

اسلام آبادکی انسداد دہشتگردی عدالت نے پی ٹی وی عمارت اورپارلیمنٹ حملہ کیسز میں وزیراعظم عمران خان کو حاضری سے مستقل استثنیٰ دے دیا۔
انسداد دہشت گردی عدالت میں پی ٹی وی، پارلیمنٹ حملہ کیس کی سماعت ہوئی۔
سماعت کے دوران عمران خان کی جانب سے ان کے وکیل بابر اعوان پیش ہوئے اور وزیراعظم عمران خان کی حاضری سے مستقل استثنیٰ کی درخواست دائر کی۔
بابر اعوان کا موقف تھا کہ ملزم ایک سے زیادہ ہو تو شریک ملزمان کو حاضری سے استثنیٰ مل سکتا ہے۔
اس موقع پر پراسیکیوٹر نے کہا کہ عمران خان کو حاضری سے استثنیٰ دینے پر کوئی اعتراض نہیں۔
جس کے بعد انسداد دہشت گردی عدالت نے عمران خان کو حاضری سے مستقل استثنیٰ دے دیا۔
عمران خان کی طرف سے بابر اعوان نے پیشی کے لیے بیان حلفی جمع کروادیا اور کہا کہ وزیراعظم عمران خان کی جگہ میں پیش ہوا کروں گا اور کیس کی کسی بھی اسٹیج پر عدالت کہے گی تو عمران خان پیش ہوجائیں گے۔
دوسری جانب کیس میں نامزد وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی، وزیر خزانہ اسد عمر، جہانگیر ترین، اعجاز چوہدری، شفقت محمود، علیم خان اور سیف اللہ نیازی کو بھی حاضری سے استثنیٰ مل گیا۔
جس کے بعد عدالت نے پی ٹی وی اور پارلیمنٹ حملہ سمیت دھرنے کے دوران قائم کیے گئے مقدمات کی سماعت یکم اکتوبر تک کے لیے ملتوی کردی۔
واضح رہے کہ 2014 میں پاکستان تحریک انصاف اور پاکستان عوامی تحریک نے اس وقت کی حکومت کے خلاف دھرنے دیئے تھے۔ اس دوران مشتعل ہجوم نے پی ٹی وی اورپارلیمنٹ پر دھاوا بولا تھا۔ ان مقدمات میں صدرمملکت عارف علوی بھی نامزد ہیں۔