روز مرہ سرکاری امور چلانے کے لیے قرضے لینے پڑ رہے ہیں۔ اسد عمر

وفاقی وزیر پلاننگ اسد عمر کہتے ہیں کہ اس وقت کرنٹ اکاؤنٹ سرپلس پر چل رہا ہے، معیشت کی عمارت کیلیے بنیادیں ڈال چکے ہیں، گروتھ خود بخود نہیں ہوتی، اس کے پیچھے سوچ ہوتی ہے، روز مرہ سرکاری امور چلانے کے لیے قرضے لینے پڑ رہے ہیں۔

اسلام آباد میں پاکستان انسٹیٹیوٹ آف ڈیولپمنٹ آف اکنامکس کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وفاقی وزیر پلاننگ اسد عمر نے کہا کہ ہم 3 سال میں معیشت کے بہت مشکل اور کامیاب سفر سے گزر کر آئے ہیں، گروتھ کی شرح نمو کی نوعیت کیا ہے، یہ جاننا لازمی ہے۔

وفاقی وزیر نے کہا کہ ڈیرہ بگٹی سے گیس نکلے، لاہور ، کراچی ، اسلام آباد آئے اور ڈیرہ بگٹی کو ہی نہ ملے تو وہی ہوگا جو بلوچستان میں ہوا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہمیں گروتھ یوں حاصل کرنی ہے جس سے لوگوں کو فائدہ ہو، اسد عمر نے بتایا کہ وفاق کی طاقت اب بہت حد تک صوبوں میں چلی گئی ہے، سرکاری پیسوں میں اب صوبوں کا بہت حد تک کردار ہے۔

اسد عمر نے کہا کہ دنیا میں موسمیاتی تبدیلی کی وجہ سے ملکوں کی معیشت متاثر ہوئی ہے، دس ممالک کو موسمیاتی تبدیلی کا خطرہ ہے، پاکستان ان میں سے ایک ہے۔

وفاقی و زیر اسد عمر نے مسلم لیگ ن کے رہنما شاہد خاقان عباسی کے بیان پر شدید رد عمل دیتے ہوئے کہا کہ شاہد خاقان عباسی دو ٹکے کی تحقیق کرلیا کریں ، سارے پاکستان میں ویکسین کا شیڈول دیا جا چکا ہے ۔

اسد عمر نے کہا کہ لاکھوں کی تعداد میں خریدی گئی ویکسین آچکی ہے ، شاہد خاقان کم از کم میڈیا کی رپورٹس ہی دیکھ لیا کریں ۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.